پنجابی گلوکار سدھو موسے والا کو مانسہ میں فائرنگ کر کے قتل کر دیا گیا۔

پنجابی گلوکار سدھو موسے والا کو مانسہ میں فائرنگ کر کے قتل کر دیا گیا۔

ذرائع کے مطابق مشہور پنجابی گلوکار سدھو موسے والا کو اتوار کے روز پنجاب کے ضلع مانسہ کے گاؤں جواہر پور میں گولی مار کر قتل کردیا گیا۔

تین افراد کو اسپتال لایا گیا، جن میں سے سدھو موسے والا بھی شامل تھا۔

رنجیت رائے، سول سرجن، منسا اسپتال نے بتایا کہ بنیادی علاج کے بعد دونوں زخمیوں کو مزید علاج کے لئے ایک اعلی درجے کے اسپتال کے حوالہ کر دیا گیا تھا۔

جمعہ کے روز پنجاب پولیس نے 424 افراد کی سیکورٹی واپس لینے کا حکم دیا تھا جس میں سدھو موسے والا بھی شامل تھے۔

موسےوالا نے مانسا سے کانگریس کے ٹکٹ پر اسمبلی انتخابات میں حصہ لیا تھا۔ انہیں اے اے پی کے ڈاکٹر وجے سانگلہ نے شکست دی تھی۔

کانگریس پارٹی نے گلوکار کے انتقال پر اظہار تعزیت کیا۔ “پنجاب سے تعلق رکھنے والے کے ایک باصلاحیت موسیقار اور کانگریس کے امیدوار شری سدھو موسے والا کا قتل کانگریس پارٹی اور پوری قوم کے لئے غم اور خوف کی لہر بن کر سامنے آیا ہے۔

پنجابی گلوکار سدھو موسے والا کو مانسہ میں فائرنگ کر کے قتل کر دیا گیا۔

کرن جوہر نے آدھی رات کو گوری خان، فرح خان اور دیگر کے ہمراہ سالگرہ کا کیک کاٹا.

اپنا تبصرہ بھیجیں

seventeen − one =