پاکستانی طلباء حالیہ ویزا پالیسی کے تحت چین واپس جا رہے ہیں۔

چینی حکام کی جانب سے 24 اگست کو نافذ کی گئی نئی ویزا پالیسی کے تحت پاکستانی طلباء نے چین واپس جانا شروع کر دیا ہے۔

بلال خان جو کہ شنگھائی میں ایسٹ چائنا نارمل یونیورسٹی (ECNU) میں پی ایچ ڈی کا طالب علم ہے، نئی پالیسی کے موثر ہونے کے بعد واپس چین پہنچ گیا۔

انہوں نے انکشاف کیا کہ یہ عمل آسان تھا، اور حکام نے تعاون کیا۔ تاہم، خان نے مزید کہا کہ طلباء کو پریشانی سے محفوظ تجربہ حاصل کرنے کے لیے، انہیں قرنطینہ کے ضوابط پر عمل کرنا ہوگا اور حکام کے ساتھ تعاون کرنا ہوگا۔

خان کے ساتھ ایک اور طالب علم پاکستان انٹرنیشنل ایئر لائنز (پی آئی اے) کی چین کے شہر ژیان جانے والی پرواز میں موجود تھے۔ پرواز میں زیادہ تر پاکستانی مسافر پوسٹ ڈاکٹریٹ کے طالب علم تھے، جن میں سے اکثر کے پاس چینی ورک پرمٹ بھی تھے۔

تفصیلات کے مطابق، خان نے نئی پالیسی کے مطابق ژیان روانگی کی خبر سوشل میڈیا پر شیئر کی اور ان کی پوسٹ پر چین میں زیر تعلیم پاکستانی طلباء کی جانب سے متعدد تبصرے آئے، جنہوں نے انکشاف کیا کہ ان کی درخواست کا عمل بھی جاری ہے۔

طلباء نے یہ بھی بتایا کہ ان کی یونیورسٹیوں نے انہیں چینی حکومت کی نئی پالیسی گائیڈ لائنز کے تحت ان کی واپسی کے لیے جلد تیاری کرنے کے لیے مطلع کیا ہے۔

پاک چین شراکت داری کو مزید مضبوط کرنے کا عمل جاری۔

اپنا تبصرہ بھیجیں

twenty − two =