اتحادی حکومت کا قومی اسمبلی کو تحلیل نہ کرنے کا فیصلہ۔

اتحادی حکومت کا قومی اسمبلی کو تحلیل نہ کرنے کا فیصلہ۔

تفصلات کے مطابق اتوار کو پنجاب کے اہم ضمنی انتخابات میں تحریک انصاف کی زبردست کامیابی کے تناظر میں حکمران اتحاد نے قبل از وقت عام انتخابات کرانے کے پی ٹی آئی کے مطالبے کے پیش نظر قومی اسمبلی (این اے) کو تحلیل نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

مسلم لیگ (ن) کے باخبر ذرائع نے بتایا کہ موجودہ مخلوط حکومت نے قبل از وقت انتخابات کا انتخاب نہ کرنے اور 17 اگست 2023 تک اپنی مدت پوری کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

یہ فیصلہ وزیر اعظم شہباز شریف کی زیر صدارت حکومتی اتحادی جماعتوں کے اجلاس میں کیا گیا۔

اجلاس میں پی ڈی ایم کے سربراہ مولانا فضل الرحمان، پی پی پی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری اور دیگر اہم سیاسی رہنماؤں نے شرکت کی۔

اتحادی جماعتیں اپنے کرپشن کیسز ختم کرنے کے لیے اقتدار میں آئی ہیں،عمران خان کا دعویٰ

اپنا تبصرہ بھیجیں

sixteen − six =