سندھ نے محکمہ پولیس میں 2000 آسامیوں کا اعلان کر دیا۔

ایک اہم پیش رفت میں، سندھ کی صوبائی حکومت نے صوبے بھر میں عوام کی حفاظت کو یقینی بنانے کے لیے پولیس اہلکاروں کی تعداد بڑھانے کا فیصلہ کیا ہے۔

اس سلسلے میں وزیر اعلیٰ سید مراد علی شاہ نے ریپڈ رسپانس فورس (RRF) اور دیگر خصوصی پولیس یونٹس کے لیے 2000 پولیس اہلکاروں کی بھرتی کی منظوری دے دی ہے۔

اس پیشرفت پر تبصرہ کرتے ہوئے، سندھ کے انسپکٹر جنرل آف پولیس، غلام نبی میمن نے کہا کہ بھرتی ہونے والے پولیس اہلکاروں کی تربیت کے دوران ہونے والے تمام اخراجات بھی حکومت برداشت کرے گی۔

اس آزمائشی وقت میں فورس کی محنت اور کاوشوں کو خراج تحسین پیش کرنے کے لیے تقریب میں سابق پاکستانی کرکٹر سعید انور، پولیس افسران اور صوبے کے دیگر معززین نے بھی شرکت کی۔

تقریب کے دوران غلام نبی میمن نے ڈی آئی جی ٹریفک احمد نواز چیمہ کو بھی ہدایت کی کہ وہ ٹریفک پولیس اہلکاروں کو ان کی رہائش گاہوں کے قریب تعینات کرنے کے بارے میں تفصیلی سفارشات پیش کریں۔

اسلام آباد کی عدالت نے شہباز گل کو 48 گھنٹے کے لیے پولیس کے حوالے کرنے کا حکم دے دیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں

20 − four =