پاکستان اس ہفتے سردی کی شدید لہر کے لیے تیار رہے۔

ایک سخت سردی کی لہر اس ہفتے پاکستان کو اپنی لپیٹ میں لینے والی ہے، پارہ منفی 15 ڈگری سینٹی گریڈ تک گرنے کا امکان ہے، پاکستان کے سب سے بڑے خودکار ویدر اسٹیشنز نیٹ ورک پاک ویدر نے پیش گوئی کی ہے۔

تفصیلات کے مطابق سردی کی لہر 10 جنوری سے شروع ہوگی جو 14 جنوری تک جاری رہے گی۔ اس دوران پہاڑی علاقوں میں شدید برف باری کی پیش گوئی کی گئی ہے۔

خیبرپختونخوا (کے پی) اور بلوچستان کے بالائی علاقوں کے ساتھ ساتھ گلگت بلتستان (جی بی) اور آزاد جموں کشمیر (اے جے کے) میں برفباری کا امکان ہے۔ اس کے علاوہ مری میں بھی برف باری ہوگی۔

بلوچستان کے شمال مغربی، مغربی اور وسطی علاقوں میں درجہ حرارت منفی 10 ڈگری سینٹی گریڈ تک رہ سکتا ہے اور کے پی کے بالائی علاقوں میں بھی یہی متوقع ہے۔ GB میں درجہ حرارت -15 ° C اور AJK میں -12 ° C تک گر سکتا ہے۔

ماہرین کے مطابق ایک کمزور قطبی بھنور کی وجہ سے سائبیرین ہوائیں اس خطے میں پوری شدت کے ساتھ چلیں گی، جس کے نتیجے میں ملک میں سردی کی لہر آئے گی۔ قطبی بھنور مضبوط سائبیرین ہواؤں کو اس خطے میں جانے سے روکتا ہے۔

لاہور کا فضائی معیار خراب ہونے والے شہروں میں پانچواں نمبر.

اپنا تبصرہ بھیجیں

five × four =