نائلہ کیانی گاشربرم I عبور کرنے والی پہلی پاکستانی خاتون بن گئیں۔

نائلہ کیانی گاشربرم I عبور کرنے والی پہلی پاکستانی خاتون بن گئیں۔

ایک اور شاندار کارنامے میں پاکستانی کوہ پیما نائلہ کیانی جمعے کے روز دنیا کی گیارہویں بلند ترین چوٹی گاشربرم-I (8068 میٹر) کی چوٹی پر پہنچ گئیں، اور پہاڑ کو سر کرنے والی پہلی پاکستانی خاتون بن گئیں۔

تفصیلات کے مطابق 6 پاکستانی کوہ پیماؤں شہروز کاشف، سرباز خان، ساجد علی سدپارہ، امتیاز سدپارہ، سہیل سخی اور نائلہ نے صبح 7 بجے گاشر برم I کو سر کیا۔

سمٹ کے ساتھ، نائلہ اپنی پہلی کوشش میں 8000 میٹر کی تین چوٹیوں کو سر کرنے والی پہلی پاکستانی بھی بن گئیں۔
دریں اثنا، سرباز نے 8000 میٹر سے اوپر کی اپنی بارھویں چوٹی کو سر کیا ہے، جو کسی بھی پاکستانی کوہ پیما کی طرف سے سب سے زیادہ ہے۔

دریں اثنا، سرباز نے 8000 میٹر سے اوپر کی اپنی بارھویں چوٹی کو سر کیا ہے، جو کسی بھی پاکستانی کوہ پیما کی طرف سے سب سے زیادہ ہے۔

20 سالہ شہروز اپنی موجودہ مہم کے ساتھ 8000 میٹر سے زیادہ کی دس چوٹیوں کو سر کرنے والے سب سے کم عمر کوہ پیما بن گئے۔
” نائلہ نے سمٹ کے بعد کہا، کہ یہ میری زندگی کے سب سے مشکل کاموں میں سے ایک تھا جو میں نے اب تک کیے”۔

” نائلہ نے سمٹ کے بعد کہا، کہ یہ میری زندگی کے سب سے مشکل کاموں میں سے ایک تھا جو میں نے اب تک کیے”۔

دو پاکستانی خوا تین نے پہلی بار K2 سر کرکے تاریخ رقم کردی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں

5 × 3 =