ایف آئی اے کو سیاستدانوں اور سفارتکاروں کے لیے خصوصی امیگریشن کاؤنٹر قائم کرنے کا حکم جاری۔

قومی اسمبلی (این اے) کے ایک پینل نے وفاقی تحقیقاتی ادارے (ایف آئی اے) کو ارکان پارلیمنٹ، سفارت کاروں اور سرکاری اہلکاروں کے لیے بین الاقوامی ہوائی اڈوں پر الگ الگ امیگریشن کاؤنٹرز قائم کرنے کا حکم دیا ہے۔

یہ ہدایات ایم این اے رمیش لال کی جانب سے رانا محمد قاسم نون کی زیر صدارت این اے کی قائمہ کمیٹی برائے قواعد و ضوابط اور استحقاق کے اجلاس کے دوران ایف آئی اے کی جانب سے ان کی کالز کا جواب نہ دینے پر تحفظات کا اظہار کرنے کے بعد دی گئیں۔

ایم این اے رمیش لال نے اجلاس کے دوران بتایا کہ انسپکٹر گوہر اور ڈائریکٹر ایف آئی اے عبداللہ شیخ نے امیگریشن کے دوران ان کی فون کالز واپس نہیں کیں۔

اس کے نتیجے میں، کمیٹی نے کراچی کے ڈائریکٹر FIA سے کہا کہ وہ 15 دن میں تحقیقات کرکے رپورٹ پیش کریں۔ اس کے علاوہ کمیٹی نے مستقبل میں ایسے مسائل سے بچنے کے لیے FIA کی استعداد کار بڑھانے کی تجویز بھی دی۔

غور طلب ہے کہ ڈائریکٹر fia نے ابھی تک ایم این اے کی کالز کا جواب نہ دینے پر اپنا بیان نہیں دیا۔ اس لیے ڈائریکٹر کی جانب سے انکوائری رپورٹ پیش کرنے کے بعد قائمہ کمیٹی اپنے فیصلے پر نظر ثانی کر سکتی ہے۔

پنجاب کابینہ میں ‘خفیہ’ توسیع پر عمران خان ‘پریشان’

اپنا تبصرہ بھیجیں

8 − 4 =