ایوب خان کا پاکستان کی معیشت میں نمایاں اور اہم کردار

ایوب خان کے دور میں پاکستان کی معیشت تیزی سے ترقی کی جا نب بڑھی۔ان کے گیارہ سال کے دور حکومت کے دوران اقتصادی ترقی کی شرح 32 .5% تک جا پہنچی۔ جنرل ایوب خان کے دور میں پہلی مرتبہ سیمنٹ اور آٹو موبائل انڈسٹری کے قیام نے پاکستان کی معاشی حالت کو مضبوط بنایا۔

اقتصادی ترقی کے لیے پہلا منصوبہ ( 1960 – 1955) جبکہ دوسرا اقتصادی منصوبہ (1960-1965) میں بنایا گیا۔

اور پہلے منصوبے میں دو بلین کے قریب جبکہ دوسرے منصوبہ میں تین بلین اضافہ سے ملک کی مالیاتی توسیع میں قابل غور زیادتی کا سبب بنا۔ اور ملک کی مالی حالت پروان چڑھی۔
1959 میں وسیع پیمانے پر زمینی اصلاحات نے پاکستان کی معیشت کی ترقی میں نمایاں کردار ادا کیا۔ صنعتی اور زرعی شعبوں میں بہتری نے مالی پسماندگی کو ختم کرنے کی راہ ہموار کی۔
-زرعی ترقی میں سالانہ.6.3% اضافہ ہوا
بہت سے ڈیم اور سڑکیں بنائی گئیں جس سے پاکستان کی معیشت مزید ترقی کی راہ پر گامزن ہوئی۔ 1960 میں صنعتی ترقی میں %7 اضافے کے نتیجے میں پاکستان کی معیشت بھارت کے مقابلے میں تین گناہ آ گے بڑھ گئی۔

 ایوب خان کے دور میں جی ڈی پی کی نمو میں اضافہ

ایوب خان کے دور میں جی ڈی پی میں امید سے زیادہ اضافہ ہوا۔ 1958میں جی ڈی پی کی شرح% 8.5 تھی۔ جو کہ ان کے دس سے گیارہ سال کے دور حکومت میں1969 میں %14تک جا پہنچی۔دوسرے اقتصادی منصوبے میں مالیاتی حالت میں واضح چڑھاؤ دیکھا گیا۔

ایوب خان کے دور میں مالی آمدنی میں اضافہ

ایوب خان کے دور میں سرمایہ کاری میں دو گنے سے بھی زیادہ اضافہ ہوا۔ سرمایہ کاری %2.5 سے بڑھ کر %5.6تک بڑھی۔ جس سے پاکستان کی معیشت کو فائدہ پہنچا۔ نجی سرمایہ کاری میں اڑھائی فیصد سے زیادہ اضافہ ہوا۔

ملک کی معیشت میں حیرت انگیز انقلاب نجکاری،سرمایہ کاری اور صنعتی نمو میں اضافہ کے علاوہ زرعی ترقی کی بھی مرہون منت ہے۔ زرعی ترقی کی بنا پر ان کی دور حکومت کو گرین ریولوشن کا نام دیا گیا۔ اسی ترقی کے نتیجے میں پاکستان کی نجکاری میں اضافہ ہوا جس سے پاکستان کی معیشت پروان چڑھی۔

ایوب خان کے دور حکومت کو اقتصادی ترقی کی بنیاد پر ترقی کی دہائی کہا جاتا ہے۔ ملک کی ترقی میں معیشت لازمی حصہ ہوتی ہے جسے نظر انداز نہیں کیا جاسکتا۔ انہوں نے اس کو مدنظر رکھتے ہوئے ملک کی معیشت کو مضبوط بنانے میں بہت اہم کردارادا کیا۔

سکن کیئر کےلیے موسم گرما میں اپناۓ جانے والےچند اہم اصول

کشمیر الیکشن کو عوام کی امنگوں کے مطابق ہونا چاہیے

اپنا تبصرہ بھیجیں