وزن کم کرنے کے شرطیہ ٹپس آپ بھی آزمائیں اور صحت مند زندگی پائیں.

 وزن میں کمی کی انڈسٹری افسانوں پر معمور ہے۔  لوگوں کو اکثر ہر طرح کی بے وقوفانہ حرکتیں کرنے کا مشورہ دیا جاتا ہے ، جن میں سے اکثر کے پیچھے کوئی ثبوت نہیں ہے۔  تاہم ، پچھلے کئی سالوں میں، سائنس دانوں نے متعدد حکمت عملیوں کو متعارف کرایہ جو ثبوت پر مبنی اور کارآمد ثابت ہو رہی ہیں۔ وزن کم کرنے کے شرطیہ  ٹپس آپ بھی آزمائیں اور صحت مند زندگی پائیں۔

پانی کا استعمال،خاص طور پر کھانے سے پہلے۔

اکثر دعوی کیا جاتا ہے کہ پانی وزن کم کرنے میں خاطر خواہ مدد دے سکتا ہے۔یہ بات سو فیصد درست ہے۔ پینے کا پانی ایک سے ڈیڑھ گھنٹہ میں آپ کے میٹابولزم کو 24 سے 30 فیصد تک بوسٹ کر سکتا ہے. اس سے آپ کو کیلوریز جلانے میں مدد مل سکتی ہے. کھانے سے آدھا گھنٹا قبل آدھا لیٹر پانی پینے سے ڈائٹرز کا کیلوریز کا استعمال کم ہو جاتا ہے۔  اور وزن میں 44 فیصد زیادہ کمی آتی ہے،ان لوگوں کے مقابلے میں جو کام پانی پیتے ہیں۔

ناشتے کے لیے انڈوں کا استعمال

مطالعات کے مطابق اناج پر مبنی ناشتے کو انڈوں کے ساتھ تبدیل کرنے سے اگلے 36 گھنٹوں تک آپ کیلوریز لیتے ہیں۔ اور ساتھ ہی ساتھ جسمانی چربی اور وزن میں نمایاں کمی آتی ہے۔انڈے کےعلاوہ آپ ناشتے کے لیے پروٹینز کے کسی بھی ذریعہ کو استعمال کر سکتے ہیں۔

وزن کم کرنے کے شرطیہ ٹیپس

کافی پئیں،خاص طور پر بلیک کافی

کافی کو غیر متعلقہ طور پر نظر انداز کیا گیا ہے۔حالانکہ کوالٹی کافی اینٹی آکسیڈنٹس سے بھری ہوئی ہوتی ہے. اس کے استعمال سے صحت کے بے شمار فوائد ہو سکتے ہیں۔
ایک تحقیق سے پتہ چلتا ہے کہ کافی میں موجود کیفین تحول یعنی میٹابولزم کو 3 سے 11 فیصد تک بڑھا سکتی ہے۔ کافی چربی کو جلانے میں 10 سے 29 فیصد تک مددگار ثابت ہو سکتی ہے۔  آپ کافی میں غیر ضروری چینی یا ہائی کیلوریز والے اجزاء شامل نہ کریں۔  ورنہ کسی بھی قسم کے فوائد کی نفی ہو گی۔

وزن کم کرنے کے شرطیہ ٹیپس

گرین ٹی کا استعمال کریں

کافی کی طرح گرین ٹی کے بھی بہت سے فائدے ہیں جن میں سے ایک وزن میں کمی بھی ہے۔ اگرچہ گرین ٹی میں کیفین کی مقدار زیادہ نہیں ہوتی،  لیکن یہ طاقتور اینٹی آکسیڈنٹس بھرپور ہوتی جنہیں کٹچنس  کہا جاتا ہے۔  ان کے بارے میں یہ کہا جاتا ہے کہ یہ چربی کو پگھلانے میں جادو کی حیثیت سے کام کرتے ہیں۔

وزن کم کرنے کے شرطیہ ٹیپس

انٹرمیٹنٹ فاسٹنگ وزن کم کرنے کے شرطیہ ٹپس میں شامل ہے

انٹرمیٹنٹ فاسٹنگ ایک مشہور ڈائٹری عمل ہے جس میں لوگ کھانے اور فاسٹنگ کا ایک سائیکل بناتے ہیں۔قلیل مدتی مطالعے سے پتہ چلتا ہے کہ انٹرمیٹنٹ فاسٹنگ وزن میں کمی کے لیے اتنی ہی مؤثر جتنی کے کیلوریز کی روک تھام ۔
گلوکو مینن سپلیمنٹ لیں۔ گلوکو مینن نامی سپلیمنٹ کو تحقیق میں وزن میں کمی کے لیے فائدہ مند بتایا گیا ہے۔ فائبر کی یہ قسم پانی کو جذب کرتی ہے اور تھوڑی دیر کے لئے آپ کی آنت میں جا کر بیٹھ جاتی ہے۔  جس سے آپ کو پیٹ بھرا ہوا محسوس ہوتا ہے اور آپ کم کیلوریز لیتے ہیں۔

مصنوعی میٹھے کو ترک کریں

مصنوعی مٹھاس جدید ڈائٹ میں شامل بدترین اجزاء میں سے ایک ہے۔مطالعہ سے پتہ چلتا ہے کہ چینی (اور ہائی فرکٹوز کارن سیرپ) کا استعمال بڑھتے ہوئے موٹاپے کے خطرے کی علامت ہے. ٹائپ 2 شوگر اور دل سے متعلق بیماریوں کا رِسک اس سے منسلک ہے۔

وزن کم کرنے کے شرطیہ ٹیپس

   پورشن کنٹرول کرنا  بھی وزن کم کرنے کے شرطیہ ٹپس  میں سے ایک  کارآمد

ٹپ ہے

محض کم کھانا یا کیلوری کی گنتی کرنا بہت کارآمد ثابت ہوسکتا ہے۔ کچھ مطالعات سےیہ بھی پتہ چلتا ہے کہ کھانے کی ڈائری رکھنے سے آپ کو وزن کم کرنے میں مدد مل سکتی ہے۔

مرچ کا استعمال کریں

مرچ میں کیپساسین ، ایک مصالہ دار مرکب ہوتا ہے جو تحول کو فروغ دیتا ہے۔ یہ آپ کی بھوک کو قدرے کم کرسکتا ہے۔ لوگ وقت کے ساتھ ساتھ کیپساسین کے اثرات کو برداشت کرسکتے ہیں، جو اس کی طویل مدتی تاثیر کو محدود کرسکتے ہیں۔

وزن کم کرنے کے شرطیہ ٹیپس

ایروبکس ورزش کریں

ایروبک ورزش (کارڈیو) کرنا کیلوری جلانے اور اپنی جسمانی اور ذہنی صحت کو بہتر بنانے کا ایک بہترین طریقہ ہے۔ یہ پیٹ کی چربی کم کرنے کے لیے خاص طور پر موثر ثابت ہوتا ہے. غیر صحت بخش چربی جو آپ کے اعضاء کے گرد وابستہ ہوتی ہے اور میٹابولک بیماری کا سبب بنتی ہے۔

arobics

سبزیاں اور پھل زیادہ کھانا وزن کم کرنے کے شرطیہ ٹپس میں سےسب سےآسان

اورآزمودہ ٹپ ہے

سبزیوں اور پھلوں میں متعدد خصوصیات ہیں جو انھیں وزن کم کرنے کے لئے موثر بناتی ہیں۔ان میں کچھ کیلوری ہوتی ہے لیکن بہت سارا فائبر ہوتا ہے۔مطالعات سے پتہ چلتا ہے کہ جو لوگ سبزیاں اور پھل کھاتے ہیں ان کا وزن کم ہوتا ہے۔ان سے بنے کھانوں میں بہت زیادہ غذائیت ہوتی ہے ، لہذا ان کو کھانا آپ کی صحت کے لئے ضروری ہے۔

fruits and vegetables

وے پروٹین سپلیمنٹ استعمال کریں

اگر آپ اپنی غذا میں کافی پروٹین حاصل کرنے کے لئے جدوجہد کرتے ہیں تو ، پروٹین پاؤڈر مدد کرسکتا ہے۔ایک مطالعے کے مطابق اگرآپ  کیلوری کو وے پروٹین سے تبدیل کریں تو وزن میں 8 گرام تک کمی میں ہوسکتی ہے۔ جبکہ پٹھوں کی قوت میں بڑے پیمانے پر اضافہ بھی ہوگا۔

تندوری چکن تھائیز-ایک مشہور اور ہر دل عزیز ایشیائی پکوان

منی لانڈرنگ اور اینٹی منی لانڈرنگ ایکٹ 2010کیا ہے؟

اپنا تبصرہ بھیجیں

five − 3 =